نئی دوا ”ایورمکٹن“کے کورونا وائرس کے علاج کیلئے حیران کن مثبت نتائج

Published On: 2020-05-24 12:57:54, By: Asif

واشنگٹن () ”کووڈ 19“ یا نیو کورونا وائرس کے علاج کیلئے ایک نئی دوا ”ایور میکٹن“ (IVERMECTIN) کے موثر ہونے کی اطلا عا ت کو طبی محققین نے ایک بہت بڑا ”بریک تھرو“ قرار دیا ہے۔ امریکہ اور بیرون ملک عام وائرل انفیکشن کیلئے استعمال ہونیوالی اس دوا پر امریکہ اور بیرون ملک ہونیوالے تجربات میں ثابت ہوگیا ہے کہ یہ نیو کورونا وائرس کیلئے بھی برابر کی تاثیر رکھتی ہے۔ یاد رہے کہ امریکی ادارہ ”فوڈ اینڈڈرگ اتھارٹی“ (ایف ڈی اے) اسے وائرل انفیکشن کیلئے پہلے ہی منظور کر چکا ہے جس کا مطلب یہ ہے کہ اسے کوروناوائرس کے علاج کیلئے دوبارہ منظوری لینی نہیں پڑے گی۔ امریکی میڈیا کی رپورٹ کے مطابق امریکہ اور بیرون ممالک اس دوا کے کورونا وائرس کیلئے استعمال کرنے کے بیک وقت تجربات ہوئے اور تمام ڈاکٹروں کو بہت مثبت نتائج ملے ہیں۔ ڈاکٹروں کا کہنا ہے کہ جونہی اس دوا کوکورونا کے مریضوں پر استعمال کیا گیا اس کی انفیکشن ڈرامائی طورپر کم ہونا شروع ہوگئی۔ اس دوا کو سر کی جوئیں ختم کرنے کیلئے بھی استعمال کیا جاتا تھا۔ امریکی ریاست فلوریڈا کے ایک ایمرجنسی میڈیکل فزیشن ڈاکٹر پیٹر ہبرڈ نے ایک ٹی وی چینل کو انٹرویو دیتے ہوئے بتایا کہ انہیں نیو کورونا وائرس کے علاج کیلئے نئی دوا ”ایورمیکٹن“ سے بہت امیدیں وابستہ ہیں۔

Re-Designed & Developed By: City Software House Chitral [0345-5742494]