اہل سنت والجماعت کے امیر مولانا حافظ خوش ولی خان نے کہا ہے کہ کربلا کا واقعہ ہمیں یہ درس دیتی ہے کہ حق کے راہ میں سر کٹوائے تو جاسکتے ہیں لیکن انہیں کسی کے سامنے جھکانا ہر گز قبول نہیں ہے

Published On: 2020-09-01 04:32:29, By: Asif

چترال (نمائندہ شندور ٹائمز) اہل سنت والجماعت کے امیر مولانا حافظ خوش ولی خان نے کہا ہے کہ کربلا کا واقعہ ہمیں یہ درس دیتی ہے کہ حق کے راہ میں سر کٹوائے تو جاسکتے ہیں لیکن انہیں کسی کے سامنے جھکانا ہر گز قبول نہیں ہے اور یہ بات بھی واضح ہوگئی ہے کہ اسلام کی بقا قرآن عظیم الشان، نبی پاک کی ذات اقدس اور حضرات صحابہ کرام کی پیروی اور ان کے ادب و احترام میں پوشیدہ ہے اور ہر مسلما ن صحابہ کرام کے نام پر مرمٹنے کو تیار ہے۔ جماعت اہلسنت الجماعت چترال کے زیر اہتمام چترال پریس کلب میں سیدنا فاروق اعظم رضی اللہ عنہ و سیدنا حسین رضی اللہ عنہ کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے انہوں نے کہاکہ یہ بہت افسوس کا مقام ہے کہ اسلام کے نام پر وجود میں آنے والے ملک میں دانستہ طور پر ایک گروہ حضرات صحابہ کی شان میں گستاخی کا ارتکاب کر رہا ہے جن کا اصل مقصد حضور کی رسالت کے گواہ صحابہ کرام کو متنازعہ بنا کر اسلام کی حقانیت سے لوگوں کو گمراہی کی طرف لے جا نا ہے جبکہ حقیقت یہ ہے کہ خلفائے راشدین اور صحابہ کرام اسلام کے وہ ستارے ہیں کہ ان جیسے شمع رسالت کے پروانے نہ پہلے کبھی پیدا ہوئے اور نہ قیامت تک پیدا ہوں گے۔ انہوں نے کہاکہ پنجاب میں تحفظ ناموس صحابہ بل کو اسمبلی میں پیش کرنے پر محر ک کو خراج تحسین پیش کیا اور کہا کہ یہ بل صحابہ کی شان میں گستاخی کے مرتکب افراد کو روکنے میں کار آمد ثابت ہو گی۔ انہوں نے کہاکہ ہم ان لوگوں سے صرف یہ مطالبہ کرتے ہیں کہ صحابہ کرام کے خلاف ہرزہ سرائی کرکے مسلمانوں کی دل آزاری کرنے والے اپنے عمل سے باز آجائیں۔ا س موقع پر کانفرنس میں متعدد قرار دادیں منظور کی گئیں جن میں مطالبہ کیا گیا کہ اسلام آباد میں حضرت ابوبکر صدیق رضی اللہ تعالی عنہ کی شان میں گستاخی کے مرتکب ملعون آصف رضا کو کیفر کردار تک پہنچایا جائے، صحابہ کرام کے عزت و احترام کو یقینی بنائی جائے اور اس حوالے سے قانون سازی کرکے اس پر سختی سے عملدر آمد کیا جائے۔ ایک اور قرارداد میں مولانا جاوید نے مطالبہ کیا گیا کہ سیدنا حضرت عمر فاروق رضی اللہ عنہ سمیت دیگر خلفائے راشدین سے منسوب دنوں کو سرکاری سرپرستی میں منایا جائے اور پشاور میں گستاخ رسول کو عدالت کے احاطے میں کیفر کردار تک پہنچانے والے دین اسلام کے عظیم مجاہد کو فوری طور پر رہا کیا جائے۔ کانفرنس سے مولاناسراج الدین، مولانا محمد اکرام، مولانا مجیب الرحمن، مولانا جمیل الرحمن، مولانا عبد الرحمن، مولانا اسرار الدین الہلال نے بھی خطاب کیا اور صحابہ کرام کی زندگی اور ان کی عظمت پر روشنی ڈالی۔

Re-Designed & Developed By: City Software House Chitral [0345-5742494]